Take a fresh look at your lifestyle.

آیوشمان بھارت اسکیم کی عدم توجہی سے گورنر چراغ پا

کولکاتا،2دسمبر: سنگین حالات میں مغربی بنگال کے میڈیکل انفرا اسٹرکچر پر دباو¿ زیادہ بنایا گیا تھا تا کہ مرکز کے آیوشمان بھارت اسکیم کو زیادہ طور پر سود مند بنایا جا سکے مگر ہوا اس کے بر خلاف اس کے بارے میں گورنر جگدیپ دھنکر نے یہ دعویٰ کیا کہ کوویڈ-19 کے سخت ترین ماحول میں آیوشمان بھارت اسکیم کا کام بے مثال رہا۔ گورنر نے اس کی بھی توثیق کی کہ 3فیز کے ٹرائل کو ویکسین کا آئی سی ایم آر نیسڈ میں کامیاب رہا اور پوری دنیا نے آیوشمان بھارت کا میڈیکل سلسلے میں کافی پذیرائی کی جب کہ بنگال اس فائدے سے محروم رہا گرچہ ستمبر کے مہینے میں ترنمول حکومت نے اس اسکیم کو رائج کرنے کی بات کہی تھی جو کہ مرکزی حکومت کے دستور سے ہم آہنگ تھا۔ گورنر موصوف وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی کے وعدے پر بھی بھروسہ کرلیا تھا جو کہ خود ہیلتھ کا قلمدان اپنے ہاتھوں میں لئے ہوئے تھیں ۔ بعد میں جب اس اسکیم میں غیر ضابطگی دیکھی گئی تو200کروڑ کی خطیر رقموں میں خرد برد کا شائبہ دیکھنے کو ملا۔ یہ سارے پیسے اقربا پروری، بد عنوانی و بے مصرف کاموں میں لگ گئے تھے اب گورنر موصوف کا یہ کہنا ہے کہ اس کی سختی سے جانچ ہو گی۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ افسوس اس نازک حالات میں بھی بد عنوانی و خرد برد کرنے میں ذمہ دار لوگوں کو شرم نہیں آتی ہے۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments are closed.