Take a fresh look at your lifestyle.

بی جے پی مہیلا مورچہ کی دس خواتین گرفتار وزیر اعلیٰ کے مکان کے سامنے جئے شری رام کہہ کر چلّا رہی تھیں

0

کولکاتا،8اکتوبر: بی جے پی کا مہیلا مورچہ نے بروز جمعرات کو بنگال کی وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی کے مکان کالی گھاٹ کے سامنے چلّا چلّا کر زبر دست مظاہرہ کیا ، وہ سارے اپنے احتجاج میں ممتا بنرجی کو سخت سست سنایا پھر ان کا پتلا نذر آتش کیا۔ پولس نے ان مہیلا مورچہ کی دس خواتین حامیوں کو پکڑ کر لال بازار تھانے لے گئی۔
بروز جمعرات کو بی جے پی کے حامیوں نے نابنو کا مارچ کرنے کا فیصلہ کیا اور آدھے راستے پر ہی پولس ان کے درمیان حائل ہو گئی پھر کیا دونوں جانب سے گھمسان کا رن پڑا۔ پولس نے جنونی بی جے پی کے حامیوں پر دھواں دھار لاٹھیاں برسائیں، آنسو گیس چھوڑنے جب ان کارروائیوں کے بعد بھی ان کی پیش قدمی جاری رہی تو ان پر رنگین پانی کا تیز پھوار چھوڑا گیا۔ انہیں معاملے میں بھاجپا مہیلا مورچہ کا نے کالی گھاٹ میں ممتا کے مکان کے سامنے زبر دست احتجاج کیا اور ان کا پتلا جلایا، پولس نے بھی سختی برتتے ہوئے مہیلا مورچہ کی دس حامیوں کو گرفتار کیا اور انہیں لال بازار لے کر آئے۔ بی جے پی جو اپنے دبنگ لیڈر کے قتل کے بعد ہوش کھو بیٹھی اور سکریٹریٹ کا مارچ کرنے کا منصوبہ بنایا تو اس وقت مہیلا مورچہ کی ساری عورتوں نے کالی گھاٹ میں ممتا کے مکان کے سامنے جئے شری رام کا زور دار نعرہ لگاتی رہی۔ پولس نے تو پہلے نرمی سے کام لیا مگر جب ان بے شرم عورتوں کی دیدہ دلیری بڑھنے لگی تو پولس بھی کہاں دبنے والی ان پر بزن بول دیا۔ ان کو آڑے ہاتھوں لے کر انہیں گرفتار بھی کیا۔ مظاہرے کے دن پولس نے ڈرون سے حساس علاقے ہوڑہ میدان اور سنترہ گاچھی پر خاص نظر رکھی تھی۔ ان دونوں جگہوں میں بی جے پی کے پاگل حامیوں نے تمام بیڑے کو توڑ پھوڑ دیا، مگر ان کی یہ توڑ پھوڑ کو پولس نے پسپا کر کے چھوڑا۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Leave A Reply

Your email address will not be published.