Take a fresh look at your lifestyle.

نبنو مارچ کرنے والی بی جے پی کے کئی جنونی حامیوں کے پاس پستول بھی

کولکاتا ۔8اکتوبر: بی جے پی کے مظاہرین کا نبنو مارچ کو لے کر ہوڑہ میدان میں جنگ کا میدان تبدیل ہوگیا۔ نبنو سکریٹریٹ کی طرف بڑھتے ہوئے بھاجپا کے تشدد پسند حامیوں نے پولس پر اینٹ پتھر پھینکے اور بم انداز ی بھی کی ۔ پولس نے جب بھاجپا کے پاگل حامیوں کی جنونیت کو دیکھی تو وہ بھی ان کے سامنے ڈٹ گئے اور دیوانہ وار ان پر لاٹھیاں برسامنے لگے ۔ پولس کی اس سختی کو دیکھنے کے بعد بھاجپا کے لوگوں نے اندر انتشار پیدا ہوگیا۔ سب اِدھر اُدھر بھاگنے لگے ۔مگر اس وقت ایک پولس کا یہ بھی بیان سامنے آیا کہ ملک پھاٹک کے قریب ایک نوجوان بھاجپا حامی نے اپنے جیب سے پستول نکال لیا ۔ جسے بعد پولس نے گرفتار کرلیا یاد رہے کہ بروز جمعرات کو بھاجپا نے پوری ہمت کے ساتھ نبنو سکریٹریٹ مارچ کرنے کا من بنالیا تھا ۔ اس مارچ سے پہلے ہی کئی علاقوں میں بی جے پی کے ساتھ قانونی شکنی پر پولس سے مڈ بھیڑ بھی ہوگئی جس پر پولس کا غلبہ بنارہا ۔ ہوڑہ میدان میں مارچ نکالتے وقت بھاجپا کے حامیوں نے جوش و جنون میں آکر پولس کی طرف لگائے گئے بیڑے کو وہاں سے ہاٹادیا تھا۔ پھر خضر پور کے ہسٹنگ میں بھی پولس سے بی جے پی کے حامیوں کے درمیان زبردست مڈ بھیر ہوئی ۔ جس کی وجہ سے بھاجپا کے کئی حامی زخمی ہونے کی بھی خبر ہے ۔ جب ہسٹنگ میں پولس نے مارچ کو آگے بڑھے سے روکا تو وجئے ورگیہ وہیں راستے پر بیٹھ گئے ان کے ساتھ لاکٹ چٹرجی و دیگر بھاجپا لیڈران بھی راستے پر بیٹھ گئے ۔ اس نبنو مارچ کیلئے بھاجپائیوں کے سر پر خون سوار تھا پولس کا یہی بیان ہے یہ بھی دیکھا گیا کہ کئی نوجوان و جنونی حامیوں کے پاس پستول بھی تھے ۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments are closed.