Take a fresh look at your lifestyle.

بنگال میں نوجوان طبقہ کرونا وائرس کا سب سے زیادہ متاثر

کولکاتا،29جولائی:لاک ڈاو¿ن میں نرمی کے بعد سے مغربی بنگال سمیت ملک کی دیگر ریاستوں میں کوویڈ۔19 منتقلی میں تیزی آئی ہے۔ حیرت انگیز بات یہ ہے کہ ریاست میں نوجوانوں کے گروہ پر کرونا وائرس نے خاصہ اثر دکھایا ہے۔ ایک سروے کے مطابق لاک ڈاو¿ن کھلنے کے بعد زیادہ سے زیادہ تعداد 16 سے 45 سال کی عمر میں بنگال میں وائرس کا شکار ہورہے ہیں۔ لاک ڈاو¿ن سے مستثنیٰ ہونے کے بعد محکمہ صحت مغربی بنگال نے کرونا وائرس سے متاثرہ 18541 افراد کا جائزہ لیا۔ان میں 16 سے 45 سال کی عمر کے 56.5 فیصد افراد کو کرونا نے متاثر کیا تھا۔ ان میں سے 29.3 فیصد افراد کی عمریں 16 سے 30 سال کے درمیان اور 27.2 فیصد 31-45 سال کی عمر کے تھے۔ جبکہ 46-60 سال کی عمر کے 12.9 فیصد لوگوں میں کرونا تھا۔ اس سروے میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ اس عرصے کے دوران 16 سال سے کم عمر افراد میں سے صرف 3.7 فیصد ہی کرونا سے متاثر ہوئے تھے۔ اس کے علاوہ 75 سال سے زیادہ عمر کے لوگوں کی تعداد محض 3.2 فیصد ہے۔ کولکاتا اور قریبی اضلاع سے 75 فیصد سے زیادہ نوجوان کورونا سے متاثر پائے گئے ہیں۔ مذکورہ سروے کے مطابق کرونا وائرس سے متاثرہ 75 فیصد سے زیادہ نوجوان کولکاتا اور اس سے ملحقہ شمالی 24 پرگنہ ، ہوڑہ اور جنوبی 24 پرگنہ اور ہگلی سے تعلق رکھتے ہیں۔ریاستی محکمہ صحت کے ایک اعلی عہدیدار نے بتایا کہ اس سروے سے ظاہر ہوا ہے کہ لاک ڈاو¿ن میں نرمی کے بعد مذکورہ پانچ اضلاع میں کرونا وائرس کے انفیکشن میں تیزی سے اضافہ ہوا ہے۔اس کی اصل وجہ دوسرے اضلاع سے آنے والے لوگ یہاں کام کرنے آرہے ہیں۔ان سب کی عمریں 16 سے 60 سال کے درمیان تھیں۔وہ روزی کمانے کے لئے اپنے گھر سے باہر گئے تھے اور انہیں کرونا وائرس نے متاثر کیا تھا۔ نوجوانوں کے گھر سے باہر نکل جانے کی وجہ سے منتقلی میں اضافہ ہوا۔ مشہور ماہر وائرولوجسٹ ڈاکٹر سمن پودار نے بتایا کہ اس دور کے لوگ شروع سے ہی سب سے زیادہ کورونیو وائرس سے متاثر ہیں۔ لاک ڈاو¿ن نافذ ہونے کے بعد اسکول بند ہونے کی وجہ سے زیادہ تر بچے گھر سے باہر نہیں نکل رہے ہیں۔ لہٰذا ان میں انفیکشن کم ہے۔ 60 سال سے زیادہ عمر کے لوگ بیرون ملک بھی کام کرتے ہیں اور بہت متحرک ہوتے ہیں۔ہندستان میں ہم عام طور پر 60 سال کے بعد کام نہیں کرتے ہیں۔ اس کے علاوہ یہ افراد زیادہ تر گھروں میں لاک ڈاو¿ن کی وجہ سے پھنسے ہیں۔ لہٰذا وہ زیادہ متاثر نہیں ہوئے تھے۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments are closed.