Take a fresh look at your lifestyle.

کورونا علاج کی نگرانی کےلئے چارمختلف کمیٹیاں تشکیل

0

کولکاتا ،18،مئی:مغربی بنگال میں کورونا وبائی مرض میں مبتلا لوگوں کے ساتھ ہونے والے سلوک کی نگرانی کے لئے مغربی بنگال حکومت نے چار مختلف نئی کمیٹیاں تشکیل دی ہیں۔ریاستی محکمہ صحت کے ذرائع نے اس بارے میں معلومات دی ہیں۔ اس کمیٹی کا بنیادی کام ریاست کے تمام کورونا اسپتالوں میں جاری طبی نظام کی نگرانی کرنا ہوگا۔ اس چار نئی کمیٹی میں ماہر ڈاکٹر ہیں جو سرکاری اور نجی اسپتالوں میں کورونا علاج کی نگرانی کریں گے۔اصل میں اس میں وائرل پیتھالوجسٹ ڈاکٹر رکھے گئے ہیں جو فلو سے متعلق بیماریوں کے علاج کی بھی نگرانی کریں گے۔ معیاری آپریٹنگ طریقہ کار (ایس او پی) فرض کرتے ہوئے ، چاہے علاج چل رہا ہے یا اس میں کوئی تکنیکی خامیاں ہیں۔ اس کی خصوصی نگرانی کی جائے گی۔یہ کمیٹی اپنی رپورٹ تیار کرکے سکریٹری صحت کو بھیجے گی ، جس کی کاپی چیف سکریٹری کو دی جائے گی۔ واضح رہے وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی ریاست کی وزیر صحت بھی ہیں۔ اسی لئے وہ کمیٹی کے کام کی براہ راست نگرانی بھی کریں گی۔ مغربی بنگال میں کل 68 اسپتال کورونا کے علاج کے لئے وقف کیا گیا ہے۔ ان میں سے 16 سرکاری اسپتال ہیں ، جبکہ باقی 52 نجی ہیں۔ ان سب میں ریاستی حکومت کے ذریعہ طبی انتظامات کی نگرانی کی جارہی ہے۔ در حقیقت ، مغربی بنگال حکومت نے عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) اور مرکزی وزارت صحت کی ہدایت کے مطابق کورونا کے علاج کی ہدایت کی ہے۔ بہت ساری جگہوں سے شکایات موصول ہوئی تھیں کہ کورونا سے متاثرہ مریضوں کے علاج کے لئے صحیح نگہداشت کی کمی ہے۔اس بارے میں ایک الگ کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جس کا بنیادی کام طبی انتظامات کی نگرانی کرنا ہوگا۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Leave A Reply

Your email address will not be published.