Take a fresh look at your lifestyle.

ہائی کورٹ کا اپرپرائمری میں ٹیچروں کی بحالی پرروک

0

کولکاتا ، 11 دسمبر:اپرپرائمری ٹیچروں کی بحالی ایک بار پھرسرد خانے میں چلی گئی ہائی کورٹ نے پینل کو یکسر ہی خارج کردیا۔ اس بحالی میںاقربا پروری و بدعنوان کاشائبہ ملتے ہی اس پینل کو ہی جج موسمی بھٹاچاریہ نے باطل کردیا۔ ٹیچروں کی بحالی کے لئے جو تذبذب کاماحول بناہواتھا اس کے لئے اسکول سروس کمیشن عدالت کے دروازہ کھٹکھٹایاتھا اسی تناظر میں کلکتہ ہائی کورٹ نے فیصلہ سنایاتھا اورکہاتھا کہ بحالی کی کارروائی اب نئے سرے سے شروع کی جائے ،4 جنوری سے یہ کارروائی شروع کی جائے ۔ کورٹ نے یہ بھی کہاتھا کہ 5 اپریل تک اسناد کی جانچ کی جائے اور10 مئی کے اندر انٹرویو کامعاملہ تمام ہوجائے۔ عدالت نے یہ بھی کہاکہ بحالی کی کارروائی 31 جولائی تک پورا کرنا ہوگا جونااہل ہیں انہیں الگ کردیناہوگا ٹیچروں کی جانب سے وکیل نے ایسا ہی مانگ سا منے رکھاتھا۔ یادرہے کہ اپرپرائمری میں بحالی کے لئے ٹسٹ کاامتحان 2011 و2015 سال میں ہواتھا۔ قابل اعتماد ٹیچروں کے اسناد کی جانچ کےلئے 2016 میںاشتہار نکلاتھا اورپھراسی فہرست کو 2013 میں ہائی کورٹ میں چیلنج کیاگیا۔ ترنمول کے دورحکومت میںاس بحالی کو لے کرمتعدد بار سوالات اٹھے تھے پاس امیدواروں نے بحالی کے لئے ہائی کورٹ تک بھی گئے۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Leave A Reply

Your email address will not be published.