Take a fresh look at your lifestyle.

ہاتھرس اجتماعی عصمت دری کے مخالفت میں کمرہٹی آئیڈیل ایجوکیشنل سوسائٹی کا احتجاجی مظاہرہ

0

کولکاتا 5 اکتوبر: کمرہٹی آئیڈیل ایجوکیشنل سوسائٹی کی جانب سے ادارے کے سیکریٹری سیراج نعمانی کی قیادت میں ا±تر پردیش کے ضلع ہاتھرس میں دلت لڑکی کی اجتماعی عصمت دری اور قتل سانحہ کے خلاف احتجاجی ریلی نکالی گئی۔یہ احتجاجی ریلی کمرہٹی امن کمیٹی سے نکل کر کمرہٹی آبادی کے مختلف حصوں سے ہوتے ہوئے گزری۔اس پر سکون احتجاجی مظاہرے میں یوگی اور مودی حکومت سے ہاتھرس کی مظلومہ کے لئے جلد از جلد انصاف کا مطالبہ کیا۔اس موقع پر معروف سماجی کارکن و آئیڈیل ایجوکیشنل سوسائٹی کے سیکریٹری سیراج نعمانی نے کہا کہ ملک بھر میں ہاتھرس گینگ ریپ کو لے کر جگہ جگہ سیاسی اور سماجی تنظیمیں سڑکوں پر ہے۔اتر پردیش ان دنوں عصمت ریزی کا اڈہ بن گیا ہے۔ آج جگہ جگہ سے گینگ ریپ کے واقعات سامنے آ رہے ہیں مگر پھر بھی حکومت کے کانوں میں جوں تک نہیں پہنچ رہی ہے۔ پولیس اور ریاستی حکومت بالکل نا کام ہو چکی ہے۔ یوگی حکومت اس طرح کے ظلم کو روکنے کی کوشش تک نہیں کر رہی ہے۔ آج لڑکیاں اپنے ہی گھروں میں، اپنے ہی گاو¿ں میں، اپنے ہی ملک میں محفوظ نہیں ہیں۔ جو لوگ بھی اس طرح کےحرکت کر رہے ہیں حکومت کو چاہیے کہ فاسٹ ٹریک کورٹ کے ذریعہ جلد سے جلد ان جرائم پیشہ مجرموں کو سخت سے سخت سزا دیں۔ احتجاج کے دوران منیشا ہم شرمندہ ہیں ، قاتل تیرے اب بھی زندہ ہیں کے نعرے لگائے گئے اور حکومت سے یہ مطالبہ کیا گیا کہ حکومت جلد از جلد فاسٹ ٹریک کورٹ قائم کرے اور ملزمین کو دو ماہ کے اندر فاسی دی جائے نہ کہ دوسرے معاملوں کی طرح دس دس سال لگائے جائے۔ اس احتجاجی مظاہرے میں سماجی ادارہ کی ای ای این کے جنرل سیکریٹری اصغر علی، محمد شکیل، رام بچن، اصغر علی، میراج احمد،نبیندو داس گپتا، آفتاب علی،اشوک گپتا،شیو شنکر و متعدد سماجی تنظیموں کے کارکنان نے شرکت کی۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Leave A Reply

Your email address will not be published.