Take a fresh look at your lifestyle.

دیہات کی سڑکیں تعمیرکرنے والوں پرممتا کاالٹی میٹم تین برسوں تک تیار شدہ راستوں کی نگرانی لازمی

کولکاتا2 اکتوبر:وزیراعلیٰ ممتا بنرجی نے سخت لہجے میں کہہ دیا ہے کہ گاﺅں دیہات میں جاری گھسنے کی جسارت نہ کرے ورنہ ان گاڑیوں کے مالکان کے ساتھ پولس کا رویہ غیرجانبدارانہ رہے گا۔ان کے خلاف سخت کارروائی بھی ہوسکتی ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہاکہ رات کافائدہ اٹھاکر کئی بھاری گاڑیاں گاﺅں کے اندرگھس پڑتی ہیں مگراب مقامی لوگوں کو انہوں نے ہوشیار کردیا ہے کہ وہ ایسی گاڑیوں پرنظر رکھیں اوردیکھتے ہی مقامی پولس کو ان کے بارے میں آگاہ کردے۔ کیوں کہ ان بھاری گاڑیوں سے دیہات کے پختہ راستے کی حالت خستہ ہوجاتی ہے ۔ کئی جگہوں سے ان گاڑیوں کے دباﺅ میں آکر راستے ٹوٹ پھوٹ جاتے ہیں حالانکہ راستے کی بناوٹ اورخام مال کے بارے میں وزیراعلیٰ نے تو کچھ نہیں کہا، اتنا ضرور کہہ دیا کہ اس بار جوکوئی بھی راستہ وسڑک بنانے کاٹنڈر لے گا وہ راستہ تیار کرنے کے بعد تین برسوں تک ان سڑکوں اورراستوں کی اچھی طرح دیکھ ریکھ بھی کرے گا۔ تاکہ کچھ بھی ہوگا تویہ ان کودوبارہ سے مرمت کرے گا۔ حالانکہ ان بدحال ومخدوش دیہات کی سڑکوں کو دیکھ کرپہلے بھی وزیراعلیٰ کاپارہ چڑھا تھا۔ اس بار جب اضلاع کے راستے وسڑک کی بدحالی وابتری دیکھی تو ان سے رہانہ گیا اورسخت لہجے میں وارننگ دے دی کہ جو بھی راستہ وسڑک بنانے کی ذمہ داری لیں گے انہیں یاد رہے کہ وہ تین برسوں تک ان سڑک وراستے کی نگرانی بھی کریںگے۔ راستہ ٹوٹاپھوٹا تو فوراً ہی مرمت کرائیں گے اس سے بہت حد تک مسئلہ دور ہوجائے گا۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments are closed.