Take a fresh look at your lifestyle.

متوا سماج پر ممتا کی نظر‘9 دسمبر کو ٹھاکر نگر میں میٹنگ

کولکاتا،30نومبر: یہ قیاس آرائیاں بھی کی جارہی ہیں کہ ترنمول کانگریس کے مضبوط رہنما شوبھندوادھیکاری وزیر کے مستعفی ہونے کے بعد اپنی پارٹی چھوڑ دیں گے ، جس کی وجہ سے ترنمول کانگریس مشکل میں پڑسکتی ہے۔ وزیر اعلی ممتا بنرجی نے خود اس صورتحال کو ابھار کر اس صورتحال کی کمان سنبھالی ہے۔ اس ایپی سوڈ میں ، چیف منسٹر 4 دسمبر کو تمام اضلاع کے ممتاز رہنماو¿ں کے ساتھ ورچوئل میٹنگ کریں گے۔
اس کے علاوہ ، چیف منسٹر 7 دسمبر کو مغربی مدینی پور میں ایک میٹنگ کریں گے جہاں مشرقی مدنا پور کے تمام نمایاں قائدین کو بلایا گیا ہے۔ اس کے بعد ، 9 دسمبر کو ، وزیر اعلی متیا برادری کے مضبوط گڑھ ، نادیہ ضلع کے ٹھاکر نگر میں ایک اجلاس سے خطاب کریں گے۔
7 دسمبر کو ، وزیر اعلی مغربی مدنا پور کا دورہ کریں گے۔ بتایا جاتا ہے کہ وہ مشرقی اور مغربی مدنا پور کا دورہ کریں گی۔ اگرچہ سرکاری ذرائع نے یہ بھی بتایا ہے کہ وزیر اعلی شوبھندو ادھیکاری کے گھر جا سکتے ہیں اور ان سے بات کرسکتے ہیں لیکن ابھی تک سرکاری معلومات نہیں دی گئیں۔ دراصل ، 6 دسمبر کو ، بھارتیہ جنتا پارٹی کے قومی صدر جے پی نڈا کولکاتا آرہے ہیں۔
ذرائع کے مطابق ، شوبھندوعہدیدار جے پی نڈا سے مل سکتے ہیں اور بی جے پی کی رکنیت لے سکتے ہیں۔ اگر چھ نڈا سے مل رہے ہیں ، تو ممتا بنرجی ان کے گھر نہیں جائیں گی اور اگر وہ نہیں مل پاتی ہیں تو سی ایم شوبھندوسے ملاقات کرسکتے ہیں۔ اسی وجہ سے سب کی نگاہ پوری صورتحال پر ہے۔
وزیراعلیٰ ممتا بنرجی متوا ووٹ بینک پر نگاہ ڈال رہی ہیں۔ اس سلسلے میں ، وہ 9 دسمبر کومتوا برادری کے مضبوط گڑھ ،ندیاضلع کے ٹھاکر نگر میں ایک اجلاس سے خطاب کریں گی۔ یہ بتادیں کہ متووا برادری کی 70 سے زیادہ اسمبلی نشستوں خصوصاًندیا اور شمالی اور جنوبی 24 پرگنہ کے اضلاع میں مضبوط قبضہ ہے۔ یہ برادری بنگلہ دیش سے ہجرت کرچکی ہے اور برسوں سے یہاں مہاجر کی حیثیت سے مقیم ہے۔ بنگال میں متوا کمیونٹی کے لگ بھگ 70 لاکھ مہاجرین ہیں ، جن کی نگرانی بی جے پی اور ترنمول دونوں کرتی ہے۔

 

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments are closed.