Take a fresh look at your lifestyle.

این آئی اے کا القاعدہ کے دہشت گرد کو مرشد آباد لا کر گھر کی تلاشی

کولکاتا،30،ستمبر:بنگال کے مرشد آباد ضلع سے گرفتار 6 القاعدہ دہشت گردوں میں سے ایک لیو ایان احمد کو این آئی اے کی ٹیم نے مرشد آباد لایا اور اس کے گھر کی تلاشی لی۔ ذرائع کے مطابق قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) کا افسر منگل کی صبح لیو کے ساتھ مرشد آباد کے ڈومکل پولیس اسٹیشن پہنچی۔ اس کے بعد پولس اہلکاروں اور بی ایس ایف کے جوانوں کو ساتھ لیا گیا اور سخت حفاظتی انتظامات کے تحت لومو کو ڈومکل کے علاقے میں اپنے گھر لے گئے۔این آئی اے ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ تقریبا 2 گھنٹے تک افواہوں کے بعد ان کے گھر سے متعدد مشکوک دستاویزات برآمد ہوئی ہیں۔ این آئی اے ٹیم نے اسلحہ بنانے کے لئے اس کے گھر سے برآمد ہونے والے اسلحہ کا بھی قریب سے معائنہ کیا۔لیو ایان ، مرشد آباد کے جالنگی کا رہائشی ہے ، ڈومکل کالج کا سابق طالب علم ہے۔ انہوں نے نیتا جی سبھاش اوپن یونیورسٹی سے ڈبل ایم اے لیا ہے۔ اس نے ڈومکل کالج کے شعبہ برقی میں ملازم کی حیثیت سے بھی کام کیا۔ این آئی اے ذرائع کے مطابق القاعدہ کا مشتبہ دہشت گرد لیو سوشل میڈیا پر پاکستان کے لئے مہم چلایا کرتا تھا۔ وہ متعدد واٹس ایپ گروپس کے ذریعے پاکستان میں القاعدہ کے دہشت گردوں سے وابستہ تھا۔ انکوائری میں یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ وہ سابق ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کو اپنا رول ماڈل کے طور پر دیکھتا تھا۔ سلیمانی کچھ ماہ قبل ہی امریکہ کے ایک ڈرون حملے میں مارا گیا تھا۔ این آئی اے کا کہنا ہے کہ ان کے گھر سے برآمد ہونے والی دستاویزات کی چھان بین کی جارہی ہے۔این آئی اے ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ مرشد آباد سے گرفتار دیگر دہشت گردوں کے ساتھ بھی سرچ آپریشن شروع کیا جائے گا۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ 19 ستمبر کو این آئی اے کی ٹیم نے بنگال کے مرشد آباد اور کیرالہ کے ضلع ارناکلام میں القاعدہ کے ماڈیول کو توڑتے ہوئے 9 دہشت گردوں کو گرفتار کیا تھا۔ ان میں سے 6 دہشت گردوں کو مرشد آباد اور تین کو کیرالہ سے گرفتار کیا گیا تھا۔ یہ دہشت گرد ملک کے بہت سے شہروں میں حملوں کی منصوبہ بندی کر رہے تھے۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments are closed.